وادی سون میں ٹارگٹ کلنگ، سیکورٹی اہلکار شہید



اوچھالی وادی سون (نامہ نگار)سیکورٹی کانسٹیبل نوشہرہ کو تھانہ نوشہرہ کے سامنے گولیاں مار کر شہید کر دیا گیا۔تفصیلات کے مطابق تھانہ نوشہرہ میں تعینات سیکورٹی کانسٹیبل محمد بشیرچائے پینے کے لیے تھانے سے نکلا ہی تھا کہ موٹر سائیکل پر سوار دو نامعلوم افراد نے پسٹل سے فائرنگ کر دی ۔سر اور گردن میں گولیاں لگنے سے کانسٹیبل محمد بشیر موقع پر جاں بحق ہو گیا۔نزدیکی ہوٹل پر تھانہ نوشہرہ کے کئی اہلکار چائے پینے میں مصروف تھے لیکن خوف کی وجہ سے کوئی کاروائی نہ کر سکے۔شہید کانسٹیبل کو فوری طور پر تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال نوشہرہ پہنچایا گیا جہاں پر پوسٹ مارٹم کے بعد نعش ورثاء کے حوالے کی جائے گی۔مرحوم کانسٹیبل محمد بشیر کی عمر پنتالیس سال اور وہ شادی شدہ تھا اور والدین کا اکلوتا بیٹا تھاوادی سون میں یہ ٹارگٹ کلنگ کا پہلا واقعہ ہے ۔اطلاع ملنے پر ڈی پی او ضلع خوشاب فیصل گلزار ،ڈی ایس پی پرویز خان بھاری نفری کے ہمراہ تین گھنٹے بعد تھانہ نوشہرہ پہنچ گئے ڈی پی او نے ملزمان کی فوری گرفتاری کے لیے احکامات جاری کر دیئے۔نوشہرہ وادی سون کی عوام میں خوف وہراس پھیل گیا ہے اہل علاقہ نے مطالبہ کیا ہے کہ ایس ایچ او تھانہ نوشہرہ عبدالغفار خان کو فوری طور پر معطل کیا جائے کیونکہ جو ایس ایچ او اپنے تھانے کے سامنے ٹارگٹ کلنگ نہیں روک سکتا اس نے عوام کو کیا تحفظ دینا ہے

سیکورٹی اہلکار کا قاتل کون؟ سراغ مل گیا

;
وادی سون میں ٹارگٹ کلنگ، سیکورٹی اہلکار شہید وادی سون میں ٹارگٹ کلنگ، سیکورٹی اہلکار شہید Reviewed by Khushab News on 2:24:00 PM Rating: 5

کوئی تبصرے نہیں:

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.