تربیتی کیمپ میں عامر کا کس سے اور کس طرح سامنا ہوا





خوشاب نیوز ڈاٹ کام)قومی ٹیم کے تربیتی کیمپ میں محمد عامر کا ’’باغی‘‘کرکٹرزسے سامنا ہوگیا، اظہر علی نے نیٹ میں پیسر کی گیندوں کا سامنا بھی کیا، محمد حفیظ نے پنڈلی میں تکلیف کے سبب بیٹنگ سے گریز کیا، اسپاٹ فکسنگ میں سزایافتہ کرکٹر کو سدھارنے کی ذمہ داری شعیب ملک کے سپرد کردی گئی تفصیلات کے مطابق دورئہ نیوزی لینڈ، ایشیا کپ اور ورلڈ ٹی ٹوئنٹی  کیلیے ممکنہ کھلاڑیوں کا فٹنس اینڈ ٹریننگ کیمپ ایک روزہ وقفے کے بعد قذافی اسٹیڈیم میں دوبارہ شروع ہوگیا، ایسے میں سب کی نگاہیں اس بات پر مرکوز تھیں کہ محمد عامر کی شمولیت کے بعد بغاوت کرنے والے محمد حفیظ اور اظہر علی پیسر کا سامنا کریںگے تو کیا تاثرات ہونگے، قبل ازیں دونوں11کرکٹرز کے الگ پول کے ساتھ ایک نجی جم میں ٹریننگ کررہے تھے، پیر کو اظہر علی اور محمد حفیظ پہلے اور محمد عامر بعد ازاں اسٹیڈیم آئے، پیسر نے ڈریسنگ روم سے سامان اٹھایا اور میدان میں آگئے،اس دوران رسمی سلام دعا کا موقع نہیں آیا اور تمام کھلاڑی اکٹھے وارم اپ ہوئے جس کے بعد نیٹ سیشن میں اظہر علی کو محمد عامر کا سامنا کرنے کا موقع ملا، محمد حفیظ نے پنڈلی میں کھچاؤکی وجہ سے پیسر کا سامنا نہیں کیا۔ بورڈ ذرائع کے مطابق ان کیلیے صرف ہلکی ٹریننگ ہی مناسب تھی تاہم بعد ازاں شام کے سیشن میں انھوں نے بولنگ مشین پر خاصی دیر تک پریکٹس کی۔ دوسری جانب چیئرمین پی سی بی شہر یار خان نے محمد عامر کی رہنمائی اور دیگر کھلاڑیوں کے ساتھ تعلقات کو بہتر بنانے کی ذمہ داری شعیب ملک کو سونپ دی ہے، قذافی اسٹیڈیم میں تربیتی کیمپ کا دورہ کرنے کے بعد میڈیا سے غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے بورڈ کے سربراہ نے بتایا کہ شعیب، محمد عامر کو گروم کرنے میں اہم کردار ادا کرسکتے ہیں۔ یاد رہے کہ پاکستان سپر لیگ میں کراچی کنگز کی قیادت شعیب ملک کریںگے، محمد عامر بھی اسی ٹیم میں شامل ہیں، پی سی بی کا خیال ہے کہ ایونٹ کے دوران  سابق کپتان کی رہنمائی پیسر کے ممکنہ مسائل میں کمی کا ذریعہ بن سکتی ہے۔
;
تربیتی کیمپ میں عامر کا کس سے اور کس طرح سامنا ہوا تربیتی کیمپ میں عامر کا کس سے اور کس طرح سامنا ہوا Reviewed by Khushab News on 8:59:00 PM Rating: 5

کوئی تبصرے نہیں:

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.