ایک ایسا معاملہ؟ سب ایک ہو گئے



خوشاب نیوز ڈاٹ کام)یہ ہے ضلع خوشاب کا سب سے بڑا ضلعی ہیڈ کوارٹر ہسپتال جوہرآباد جہاں مریضوں کو الٹرا ساﺅنڈ کی سہولت میسر نہیں اور وہ بھاری فیسیں ادا کر کے نجی ہسپتالوں سے امراض کی تشخیص کیلئے الٹرا ساﺅنڈ کرانے پر مجبور ہےں۔ ضلعی ہیڈ کوارٹر ہسپتال جوہرآباد میں نصب الٹراساﺅنڈ مشین پانچ برس قبل خراب ہوئی تھی جسے ناکارہ قرار دیکر لاہور بھجوایا گیا تھا۔ محکمہ صحت کی جانب سے ابھی تک کوئی نئی الٹرا ساﺅنڈ مشین فراہم نہیں کی گئی۔ ڈی ایچ کیو ہسپتال جوہرآباد کی انتظامیہ نے مریضوں کی مشکلات کے پیش نظر پہلے دیہی مرکز صحت پدھراڑ سے الٹرا ساﺅنڈ منگوائی اور دو سال تک اُس سے کام چلایا جاتا رہا۔ بعد ازاں آر ایچ سی پدھراڑ میں الٹراساﺅنڈ سپیشلسٹ کی تعیناتی کے بعد یہ مشین واپس کرنا پڑی اور ہسپتال انتظامیہ نے عارضی طور پر آر ایچ سی مٹھہ ٹوانہ سے الٹرا ساﺅنڈ مشین منگوا کر مریضوں کو سہولت مہیا کی لیکن ایک سال قبل وہ مشین بھی واپس کر دی گئی۔ اب ڈی ایچ کیو ہسپتال میں کوئی الٹراساﺅنڈ مشین نہیں ہے ۔عوامی وسماجی حلقوں نے اس صورتحال پر شدید ردِ عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ضلع خوشاب جہاں سے ایک سینیٹر ڈاکٹر غوث نیازی، ایک صوبائی وزیر ملک آصف بھائ، دو اراکین قومی اسمبلی عذیر محمد خان اور شاکر بشیر اعوان تین اراکین صوبائی اسمبلی ملک جاوید اعوان، ملک کرم الہی بندیال اور وارث کلو اور قومی سطح کی ہر دل عزیز رہنما محترمہ سمیرا ملک کا تعلق حکمران جمات مسلم لیگ ن سے ہے اور انکی حکومت سرکاری ہسپتالوں کو فعال بنانے کے بلند و بانگ دعوے بھی کرتی ہے لیکن دوسری جانب ضلع خوشاب کے سب سے بڑی سرکاری ہسپتال میں الٹراساﺅنڈ کرانے جیسی عام سی سہولت بھی میسر نہیں۔ یہ صورتحال ضلع خوشاب کے ان تمام لیگی رہنماﺅں کیلئے لمحہ فکریہ ہے ۔ عوامی حلقوں کا کہنا ہے کہ اپنی اپنی مرضی کے چیئرمین ضلع کونسل اور میونسپل کمیٹیوں کے چیئرمین بنوانے کے لیے یہ تمام اراکین جس طرح اپنی توانیاں صرف کررہے ہیں اور برتری کے دعوے کررہے ہیں کاش ڈی ایچ کیو ہسپتال کی الٹرا ساونڈ مشین فراہمی کے لیے معمولی سی بھی توجہ کرلیتے تو پانچ سال سے ضلع خوشاب کا سب بڑا اور واحد ہسپتال اس بنیادی سہولت سے محروم نہ رہتا۔جبکہ ڈی ایچ کیو ہسپتال جوہرآباد کی انتظامیہ کا موقف ہے کہ نئی الٹراساﺅنڈ مشین کی فراہمی کیلئے محکمہ صحت پنجاب کو باقاعدہ عرضداشتیں بھجوائی جا چکی ہیں اور امکان ہے کہ بہت جلد نئی مشین فراہم کر دی جائے گی۔
اشتہار
;
ایک ایسا معاملہ؟ سب ایک ہو گئے ایک ایسا معاملہ؟ سب ایک ہو گئے Reviewed by Khushab News on 12:15:00 AM Rating: 5

کوئی تبصرے نہیں:

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.