پنجاب حکومت نے اہلیان وادی سون سے ہاتھ کردیا


رپورٹ ، فرحان فاروق اعوان 

 خوشاب نیوز ڈاٹ کام)پنجاب حکومت نے گذشتہ سال کی بارشوں سے متاثرین کو رقوم کی ادائیگی کرنے کی بجائے ٹال مٹول اور محض وعدوں پر ٹرخا دیا۔متاثرین در بدر کی ٹھوکریں کھانے پر مجبور ہوگئے تفصیل کے مطابق وادی زسون میں گذشتہ سال مون سون کی بارشوں نے تباہی مچا دی تھی جس کے نتیجہ میں غریب اور متوسط طبقہ کے لوگوں کے سینکڑوں مکانات منہدم ہوگئے تھے پنجاب حکومت نے ایک خصوصی مراسلہ کے ذریعے محکمہ مال خوشاب سے وادی سون میں بارشوں سے ہونے والی تباہی کے نقصانات کا تخمینہ لگانے کا حکم دیا تھامحکمہ مال کی سروے رپورٹ کے مطابق اسی کروڑ روپے کے قریب مکانات کے گرنے کا تخمینہ لگایا گیا تھا ایک سال گزرنے کے باوجود پنجاب حکومت نے متاثرین کو ایک پائی بھی ادا نہیں کی اور مقامی سیاسی نمائندگان بھی اس سلسلہ میں کوئی کردار ادا نہیں کررہے متاثرین کے نمائندہ وفد جس میں ملک جاوید بکھوال ملک محمد اسلم ملک فتح خان صفدر حسین عالم خان اور جہانگیر اعوان شامل ہیں نے اخبار نویسوں سے بات چیت کرتے ہوئے مطالبہ کیا ہے کہ وزیر اعلی پنجاب میاں شہباز شریف بارشوں کے متاثرین کے اس حقیقی مسئلہ کو حل کرنے کے لئے جلد از جلد رقم کی ادائیگی شروع کرائیںانہوں نے کہا کہ اگر متاثرین کو رقم کی ادائیگی نہ کی گئی تو متاثرین پر امن احتجاج پر مجبور ہوں گے واضع ہو کہ گذشتہ سال طوفانی بارشوں اور ژالہ باری سے کھڑی فصلیں تباہ ہوگئی تھیں اور غریب لوگوں کے کچے مکانات گر گئے تھے متاثرین کا کہنا ہے کہ ہمیں سیاسی نمائندوں نے کئی بار یقین دہانی کرائی کہ نقصان کی رقم جلد مل جائے گی مگر ابھی تک حکومت پنجاب نے سروے کرانے کے باوجود بھی کوئی عمل درآمد نہیں کرایا۔
اشتہار

;
پنجاب حکومت نے اہلیان وادی سون سے ہاتھ کردیا پنجاب حکومت نے اہلیان وادی سون سے ہاتھ کردیا Reviewed by Khushab News on 7:52:00 PM Rating: 5

کوئی تبصرے نہیں:

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.