ڈی ایچ کیو ہسپتال، معاملہ جُوں کا تُوں






 خوشاب نیوز ڈاٹ کام)لاکھوں روپے کے اخراجات کے باوجود ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال جوہرآباد کو تسلسل کیساتھ بجلی فراہم کرنے کیلئے گریڈ اسٹیشن سے ہسپتال تک بجلی کی ایکسپریس لائنز کی تنصیب کا کام مکمل نہ ہو سکا۔ ہسپتال میں زیر علاج مریض اور میڈیکل‘ پیرا میڈیکل و نرسنگ سٹاف کو گرمی اور حبس کے شدید ترین موسم میں سخت دشواریوں کا سامنا ہے۔ ہسپتال انتظامیہ کے مطابق واپڈا کو محکمہ صحت کی جانب سے تمام مطلوبہ فنڈز فراہم کر دیئے گئے ہیں لیکن ٹھیکیدار کی غفلت اور نااہلی کے سبب ابھی تک یہ کام مکمل نہیں ہوا جبکہ واپڈا حکام کا موقف ہے کہ گریڈ اسٹیشن سے ہسپتال تک باقاعدہ نئی لائنیں بچھائی جا چکی ہیں صرف ہسپتال کی عمارت میں بجلی کے نئے پینلوں کی تنصیب کا کام باقی ہے جس کیلئے ہسپتال میں مسلسل تین گھنٹے بجلی اور جنریٹر بند رکھنا ضروری ہے لیکن ہسپتال انتظامیہ اس کی اجازت نہیں دیتی جس کی وجہ سے پینلوں کی تنصیب کا کام رُکا ہوا ہے۔ہسپتال میں آوٹ ڈور اور داخل مریضوں اور انکے لواحقین  نے اس صورتحال پر شدید ردِ عمل کا اظہار کرتے ہوئے مطالبہ کیا ہے کہ واپڈا حکام کو فی الفور اس اہم مسئلے کو حل کرنے کا پابند بنایا جائے۔ اُنھوں نے بتایا کہ ہسپتال کا اکلوتا جنریٹر ہسپتال کی عمارت کا پچیس فیصد بجلی کا لوڈ بھی برداشت نہیں کر سکتا جس کی وجہ سے لوڈ شیڈنگ کے اوقات میں ہسپتال میں زیر علاج مریض پسینے میں شرابور رہتے ہیں۔
khushabnews

;
ڈی ایچ کیو ہسپتال، معاملہ جُوں کا تُوں ڈی ایچ کیو ہسپتال، معاملہ جُوں کا تُوں Reviewed by Khushab News on 3:54:00 PM Rating: 5

کوئی تبصرے نہیں:

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.