وہ خبر جو طالب بھٹی پر حملے کا باعث بنی


خوشاب نیوز ڈاٹ کام)خوشاب کے مقامی ہفت روزہ اخبار کے چیف ایڈیٹر و سینئر صحافی طالب بھٹی پر حملہ ،  دونوں ٹانگیں توڑڈالی، اس وحشیانہ تشدد کی وجہ خبر کی اشاعت بتائی جارہی ہے ۔ وہ خبر جو اس واقعہ کا مبینہ سبب بنی طالب بھٹی کے مقامی ہفت 
روزہ اخبار کے 28جولائی تا 03اگست کے شمارے میں شائع ہونے والا بلدیات کے حوالے ایک تجزیہ ہے جس کا متن کچھ اسطرح ہے۔

خوشاب(نمائندہ خصوصی)آنے والے وقت میں خوشاب جوہرآباد کی مقامی سیاست میں فرزند خوشاب آصف بھاء اور فخر خوشاب فخر اعوان کے 
مابین دو طرفہ مفاد پر مبنی دوستی ختم ہوجائے گی یا پہلے سے ذیادہ مضبوط ہو جائے گی فخر اعوان بلدیہ جوہرآباد میں آصف بھا کی نامزدگی کے خلاف ہیں اور کسی بھی دوسرے ورکر کی بطور چیئرمین نامزدگی کے خواہاں ہیں لیکن آصف بھا اپنے ایک دوست کو نامزد کرنا چاہتے ہیں صور تحال اس سانپ کے منہ میں چھپکلی کی مانند ہے جو جسے وہ نہ اگل سکتی ہے نہ نگل سکتی ہے آصف بھا کے لیے بھی اشرف اعوان کے نام سے پیچھے ہٹنا مشکل ہے اول تو انہیں اسطرح کی نامزدگی کرنی نہیں چاہیے تھی جب کرلی ہے تو اپنی بات پر قائم رہیں اور اپنے پسندیدہ امیدوار کوکامیاب کرائیں اس سے قبل آصف بھا سکائی وے کا افتتاح بھی کرچکے ہیں اور اب اگر آصف بھا اشرف اعوان کو چیئرمین نامزد کرتے ہیں تواس صورت میں فخر اعوان اور اسکے حامی حلقے الگ ہو سکتے ہیں خوشاب جوہرآباد میں فخر اعوان کو مسلم لیگی ورکروں کی بھر پور حمائت وتائید حاصل ہے اور وہ آنے والے وقت میں آصف بھا کے لیے مشکلات کا باعث بن سکتے ہیں اگرچہ وہ خود مقابلے پر نہ آئیں لیکن انکے مخالف امیدوار کی بھرپور حمائت کرسکتے ہیں ایسا اس وقت ہو گا جب آصف بھااپنے پسندیدہ امیدوار کا انتخاب کرینگے اب یہ آصف بھا پر منحصر ہے کہ وہ اپنے پسندیدہ امیدوار کو ترجیح دیتے ہیں یا فخر اعوان کو جس نے انکا بے لوث بھرپور ساتھ دیا ہے فخر اعوان کا شمار آصف بھا کے قریبی رائٹ ہینڈساتھیوں میں ہوتاہے۔

یہ ہے اس خبر  کا عکس جس کی وجہ سے مبینہ طور پر سینئر صحافی طالب بھٹی کی دونوں ٹانگیں توڑ دی گئیں

نوٹ متذکرہ خبر طالب بھٹی کے ہفت روزہ اخبار میں شائع ہوئی ہے جو یہاں محض قارئین کی دلچسپی وآگاہی کی وجہ سے شائع کی جارہی ہے اس خبر میں استعمال ہونے والی زبان و بیان، خیالات یا تجزیہ سے خوشاب نیوز کا ہرگز کوئی تعلق نہیں اور اس کے مندرجات سے جزوی یا کلی طور پر متفق ہونا ضروری نہیں۔
khushabnews
وہ خبر جو طالب بھٹی پر حملے کا باعث بنی وہ خبر جو طالب بھٹی پر حملے کا باعث بنی Reviewed by Khushab News on 7:49:00 AM Rating: 5

No comments:

loading...
Powered by Blogger.