وادی سون،پولیس کی بھاری نفری، شدید فائرنگ


File foto

نوشہرہ وادی سون سے فرحان فاروق اعوان کی رپورٹ
خوشاب نیوز ڈاٹ کام)گزشتہ روزتھانہ نوشہرہ سے چند کلو میٹر کے فاصلہ پر مناواں گاؤں کے قریب پہاڑیوں میں شام ڈھلتے ہی اچانک جدید اسلحہ سے فائرنگ کی آوازیں شروع ہوگئیں جوکہ ایک گھنٹہ تک جاری رہیں علاقہ بھر کے لوگوں میں خوف وہراس پھیل گیا اور وادی سون کے علاقہ میں مبینہ ڈاکووں سے پولیس مقابلہ کی افوائیں گردش کرنے لگیں عینی شایدین کے مطابق اس آپریشن میں نصف درجن کے قریب گاڑیاں شامل تھیں اور درجنوں پولیس اہلکاروں اور احساس اداروں کے افراد نے حصہ لیا یہ امر بھی قابل ذکر ہے کہ تقریبا ایک ماہ قبل اسی مقام پر داعش کا کمانڈر محمد یونس اور اسکے دیگر ساتھی مناواں کے ایک مکان میں چھپے ہوئے تھے جنہیں ایک بھاری پولیس کی اور احساس اداروں کی نفری نے 
اس خبر کو بھی پڑھیں: وادی سون میں خوف و ہراس
مبینہ مقابلہ کے بعد داعش کمانڈر یونس کو ہلاک کردیا اور اس کے دیگر تین ساتھی اندھیرے کا فائدہ اٹھا کر فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے تھے گزشتہ رات ہونے والے مبینہ پولیس مقابلہ کے بارے میں ڈی ایس پی اسد اللہ خان سے رابطہ کیا تو انہوں نے بتایا کہ پولیس مقابلہ نہیں تھا بلکہ معمول کی ریہرسل کی جارہی تھی ۔

khushabnews
وادی سون،پولیس کی بھاری نفری، شدید فائرنگ وادی سون،پولیس کی بھاری نفری، شدید فائرنگ Reviewed by Khushab News on 1:52:00 PM Rating: 5

No comments:

loading...
Powered by Blogger.