قتل خوشاب میں ۔۔۔ احتجاج لندن میں

خوشاب نیوز ڈاٹ کام) ضلع خوشاب کے ایک گاوں میں قتل کی واردات کی دہائی لندن میں ۔روزنامہ اوصاف کی ویب سائٹ پر شائع ہونیوالی ایک خبر کے مطابق پیٹر براء کیمبرج شائر کے رہائشی شبیر احمد کے بھائی ظہیر احمد کو بمقام چک نمبر 45جوہر آباد ضلع خوشاب میں زمین کے تنازعے پر فیصل حسین کے ہمراہ 2012ء میں قتل کردیاگیا جبکہ ایک فرد زخمی بھی ہوا تھا سیشن کورٹ خوشاب نے ملزمان کو قتل کا مجرم قرار دیتے ہوئے ایک فرد سکندر سلطان کو پھانسی کی سزا جبکہ دو دوسرے ملزمان کو عمر قید 2013میں سنائی اس کے بعد ملزمان کے رشتہ دار سمجھوتے کے لئے زمین اور پیسہ کے عوض کوشاں رہے تو دھمکیاں بھی دیتے رہے کہ اگر راضی نامہ نہ کیا تو ہم ہائی کورٹ کے جج کو خرید لیں گے اور مقدمے سے ملزمان کو بری کروائیں گے۔ آخر کار وہی ہوا ملزمان کے ورثاء نے ہائی کورٹ میں اپیل کی کہ ملزمان کو رہا کروالیاگیا اور پھانسی اور عمر قید کے ملزمان کو ہائی کورٹ لاہور نے 2016ء میں حال ہی میں بری کردی۔ شبیر احمد نے اپنی کزن کنزیہ عاشق کے ہمراہ روزنامہ اوصاف لندن کو ایک انٹرویو میں اس زیادتی پر اپنا احتجاج ریکارڈ کروایا ہے اور کیس کے معاملے پر پاکستان ہائی کمیشن لندن اور میڈیا سے اپیل کی ہے کہ وہ لاہور ہائی کورٹ کے جج صاحبان اور ملزمان کی ملی بھگت سے مقدمہ خرد برد کرنے کی تحقیقات میں مدد کرے تاکہ انصاف کے تقاضے پورے ہوں یاد رہے کہ شبیر احمد اور ان کا قبیلہ یا خاندان متاثرین منگلا ڈیم ہیں جو پاکستان کے ضلع خوشاب میں آباد ہونے پر مجبور کئے گئے تھے جن کی اپنی زمین تھی اور اس پر ملزمان سکندر سلطان' شبیر احمد اور غلام مصطفی وغیرہ نے ناجائز قبضہ کرنے کی کوشش کی جس پر ان کے بھائی ظہیر اور کزن فیصل حسین کو قتل اور قیصر حسین کو زخمی کردیا گیا گیا تھا۔
محترم قارئین اگرکلک کرنے پر اسطرح کا پیج نظر آئے اور آپ کو خبر کی تفصیلات پڑھنے میں دشواری کا سامنا ہے تو نیچے دیئے گئے طریقہ کار پر عمل کریں





;
قتل خوشاب میں ۔۔۔ احتجاج لندن میں قتل خوشاب میں ۔۔۔ احتجاج لندن میں Reviewed by Khushab News on 10:09:00 AM Rating: 5

کوئی تبصرے نہیں:

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.