صورتحال گھمبیر، افسران پریشان ، ہر شے منجمند

خوشاب نیوز ڈاٹ کام)نئے نظام سے متعلق گائیڈ لائن کا انتظار طویل ،ضلع کی انتظامی مشینری منجمد ہو کر رہ گئی ۔مختلف محکموں کے اکاونٹس غیر فعال ہونے سے ترقیاتی کام بند، نان سیلری بجٹ نہ ملنے پر سکولوں کے روز مرہ امور زیر التوا، ضلعی حکومت کا مالیاتی نظام بحران کاشکار ہونے لگا، آئندہ ماہ تنخواہوں کی ادائیگی بھی مشکوک۔ نظام کی تبدیلی کے بعد مختلف محکموں کے بزنس رولز کا تعین تاخیر کا شکار ہونے کے باعث مسائل میں اضافہ باعث تشویش بن چکا ہے اورضلعی مالیاتی نظام بھی درہم برہم ہوکر رہ گیا ہے۔نئے نظام کے بعد 16روز گزرنے کے باوجود صورت حال یہ ہے کہ ضلع بھر کے سرکاری ادارے ذمہ داریوں اور دیگر امور کے حوالے سے حکومتی گائیڈ لائن کے انتظار میں ہیں اور لگ بھگ تمام سرکاری مشینری منجمد ہوکر رہ گئی ہے۔دوسری طرف ضلعی حکومت کا مالیاتی نظام بحران کے قریب پہنچ چکا ہے۔ 31دسمبرسے قبل بلڈنگز اور روڈز کے مختلف منصوبوں کے حوالے سے کی گئی ادائیگیوں کے چیک بینک نے گائیڈ لائن نہ ہونے اور اکاؤنٹس منجمدہونے پر مسترد کر کے ٹھیکیداروں کو واپس تھما دیئے ہیں جس کی وجہ سے ترقیاتی کاموں کو بھی بریک لگ گئی ہے اسی طر ح ضلع کے دو ہزار سے زائد سرکاری سکولوں کو حکومت کی طرف سے جاری کردہ نان سیلری بجٹ کی دو اقساط جو کہ لگ بھگ 27کروڑ روپے سے زائد ہے کی ہیں، سکول کونسلوں میں تقسیم کرنے کا عمل ٹھپ ہونے سے ان سکولوں کے یوٹیلیٹی بلز اورروزمرہ اخراجات کے لالے پڑ ے ہوئے ہیں،ذرائع کے مطابق متذکرہ محکموں اور تعلیمی اداروں میں ایک بحران کی سی کیفیت ہے اورآئندہ ماہ تنخواہوں کی ادائیگی کے حوالے سے بھی افسران و ملازمین بے یقینی کا شکارہیں
محترم قارئین اگرکلک کرنے پر اسطرح کا پیج نظر آئے اور آپ کو خبر کی تفصیلات پڑھنے میں دشواری کا سامنا ہے تو نیچے دیئے گئے طریقہ کار پر عمل کریں

;
صورتحال گھمبیر، افسران پریشان ، ہر شے منجمند صورتحال گھمبیر، افسران پریشان ، ہر شے منجمند Reviewed by Khushab News on 8:50:00 PM Rating: 5

کوئی تبصرے نہیں:

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.