ہسپتال میں نوجوان جاں بحق، ڈاکٹر گرفتار


فائل فوٹو

خوشاب نیوز ڈاٹ کام)جوہرآباد کے نجی ہسپتال میں ڈاکٹروں کی مبینہ غفلت کے باعث موضع چوہا کا رہائشی اٹلی پلٹ 22سالہ نوجوان خالد محمود جاں بحق ہو گیا‘ متوفی خالد کے لواحقین نے احتجاج کرتے ہوئے ہسپتال میں توڑ پھوڑ کی اور ہسپتال کی عمارت کو شدید نقصان پہنچایا۔ واقعہ کی اطلاع ملتے ہی مقامی پولیس موقع پر پہنچ گئی جس نے ہسپتال کے مالک ڈاکٹر امانت علی کو حراست میں لے کر متوفی خالد محمود کی نعش ضلعی ہیڈ کوارٹر ہسپتال جوہرآباد سے پوسٹمارٹم کرانے کے بعد تدفین کیلئے ورثاء کے حوالے کی۔ متوفی کے ورثاء کے مطابق خالد محمود کو اپینڈیکس کے آپریشن کیلئے ڈاکٹر امانت علی کے پاس لایا گیا جہاں آپریشن کی فورا بعد اُس کی موت واقع ہوئی اُنھوں نے ڈاکٹر امانت علی کو خالد محمود کی موت کا ذمہ دار ٹھہرایا ہے۔  اُدھر پی ایم اے ضلع خوشاب کے ایک وفد نے ضلعی صدر ڈاکٹر محمود احمد زبیری کی زیر قیادت ڈی پی او خوشاب وقاص
یہ خبر بھی پڑھیں: نرسوں کا احتجاج اہم ڈاکٹروں کی پس پردہ پشت پناہی
 حسن سے ملاقات کی وفد نے ڈاکٹر راجہ غنی مسعود عالم‘ ڈاکٹر سرفراز سیال ‘ ڈاکٹر عارف منظور ‘ ڈاکٹر طاہر حیات ڈھڈھی‘ لیڈی ڈاکٹر خالدہ کنول اور لیڈی ڈاکٹر افشیں کے علاوہ ڈاکٹر امانت علی کی اہلیہ بھی شامل تھیں۔ اس موقع پر ڈاکٹر امانت علی کی جانب سے ڈی پی او خوشاب کو ہسپتال میں متوفی خالد محمود کے لواحقین کی ہلڑ بازی اور ہسپتال میں توڑ پھوڑ کے حوالے سے درخواست دی گئی۔ ڈی پی او خوشاب نے وفد کو یقین دہانی کرائی کہ وہ تمام صورتحال کا تفصیلی جائزہ لینے کے بعد میرٹ پر فیصلہ کریں گے اور انصاف کے تقاضے ہر صورت میں پورے کئے جائیں گے۔ 
محترم قارئین اگرکلک کرنے پر اسطرح کا پیج نظر آئے اور آپ کو خبر کی تفصیلات پڑھنے میں دشواری کا سامنا ہے تو نیچے دیئے گئے طریقہ کار پر عمل کریں

khushabnews
;
ہسپتال میں نوجوان جاں بحق، ڈاکٹر گرفتار ہسپتال میں نوجوان جاں بحق، ڈاکٹر گرفتار Reviewed by Khushab News on 9:03:00 PM Rating: 5

کوئی تبصرے نہیں:

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.