تھل،ژالہ باری سے متاثرہ کسانوں کی رجسٹریشن

خوشاب نیوز ڈاٹ کام)ڈپٹی کمشنر خوشاب امجد بشیر نے کہا ہے کہ حکومت پنجاب کی ہدایت پر 23 مارچ کو ضلعی سطح پر ایک بڑ ی تقریب کا انعقاد ہوگا جس میں نئی نسل کو قرار داد پاکستان اور قیام پاکستان کی اہمیت و مقاصد سے روشناس کروایا جائے گا۔ ڈپٹی کمشنر اپنے آفس کے کانفرنس ہال میں 23 مارچ کے حوالے سے تقریب کے انعقاد کے لیے انتظامات کا جائزہ لیتے ہوئے اجلاس کی صدارت کر رہے تھے ۔ اجلاس میں ایڈیشنل ڈپٹی
 کمشنر (جنرل) عبدالحمید سنبل، ڈپٹی ڈائریکٹر سوشل ویلفیئر امتیاز احمد مانگٹ ، ڈسٹرکٹ انفارمیشن آفیسر تابندہ امجد ، چیف آفیسر ضلع کونسل افتخار احمد اور دیگرمحکموں کے افسران موجود تھے۔ اجلاس میں بتایا گیا کہ 23 مارچ کو صبح 08:30 بجے فاطمہ جناح ہال جوہرآباد میں پرچم کشائی تقریب کا انعقاد ہوگا۔ تقریب میں پارلیمنٹرین ، ضلعی محکموں کے سربراہان ، مختلف سکولوں کے طلباء اور طلبات شریک ہوں گے ۔ تقریب کا آغاز تلاوت قرآن پاک و ہدیہ نعت سے ہوگا ۔ قومی پرچم کو سلامی دی جائے گی اور پولیس کا چاک و چوبند دستہ مارچ پاسٹ کرے گا۔ بعد ازاں قرار داد پاکستان ، نظریہ پاکستان اورقیام پاکستان کے موضوع پر تفصیل سے روشنی ڈالی جائے گی ۔ تقریب میں قومی نغمے ، ٹیبلو شو اور ڈیبیٹ وغیرہ کا اہتمام کیا گیاہے ۔ اسی روز شجر کاری کو پروان چڑھانے کے لیے ضلعی افسران اور پارلیمنٹرین سے پودے لگوائے جائیں گے۔ بعدازاں ڈپٹی کمشنر کے زیر صدارت ڈسٹرکٹ ایڈ وائزری کمیٹی کے اجلاس کا بھی انعقاد ہوا۔ اجلاس میں زراعت ، لائیو سٹاک ، اریگیشن ، پلانٹ پروٹیکشن ، کراپ رپورٹنگ وغیرہ کے افسران کے علاوہ زمینداروں ، کاشتکاروں اور کھاد ڈیلروں کے نمائندگان نے شرکت کی ۔ اجلاس میں زراعت کی ترقی ، کھادوں میں ملاوٹ کے خلاف مہم ، فصلات کے اعدا دو شمار ، تحصیل نورپور تھل میں ژالہ باری کی وجہ سے فصلات کے نقصانات کا سروے رپورٹ زمینداروں کی رجسٹریشن ، کچن گارڈننگ ، سائل سمپلنگ پراجیکٹ اور دیگر امورپر تبادلہ خیال کیا گیا۔ کاشتکاروں کے نمائندہ وحیداللہ بڑانہ نے کاشتکاروں کے قرضوں پر سود کے خاتمے ، زمینوں میں کھاد کی پختگی ، حکومتی رعایت پر ٹیوب ویلوں کی فراہمی ، سولر سسٹم کے ذریعے ڈراپ اریگیشن اور نہروں میں پانی کی کمی کو پورا کرنے کے مطالبات کیے ۔ 
تھل،ژالہ باری سے متاثرہ کسانوں کی رجسٹریشن تھل،ژالہ باری سے متاثرہ کسانوں کی رجسٹریشن Reviewed by Khushab News on 8:52:00 PM Rating: 5

No comments:

loading...
Powered by Blogger.