احسان ٹوانہ نہیں، خدابخش ٹوانہ سے برابر کا جوڑ پڑیگا

خوشاب نیوز ڈاٹ کام)پاکستان تحریک انصاف ضلع خوشاب کے صدر اور سنٹرل ایگزیکٹو کمیٹی کے رُکن انجینئر گل اصغر بگھور نے کہا ہے کہ پی ٹی آئی کی ہائی کمان نے ابھی تک کسی بھی اُمیدوار کو پارٹی ٹکٹ جاری نہیں کیا ‘ ضلع خوشاب میں پارٹی ٹکٹوں کی تقسیم اور پینلوں کی تشکیل کے حوالے سے گردش کرنیوالی خبریں محض افواہیں ہیں۔ پارٹی قیادت جو بھی فیصلہ کرے گی وہ قابل قبول ہوگا ہم پارٹی کیساتھ کھڑے ہیں اور کھڑے رہیں گے۔ کئی موجودہ ایم اپی اے رابطے میں ہیں اگر وارث کلو پی ٹی آئی میں ٓجاتے ہیں تو انکے ساتھ الیکشن لڑسکتا ہوں۔ اُنھوں نے ان خیالات کا اظہار ڈسٹرکٹ پریس کلب جوہرآباد میں ’’میٹ دی پریس‘‘ کے دوران کیا۔ اس موقع پر پی ٹی آئی کے ضلعی جنرل سیکرٹری پیر فیض الحسن گیلانی‘ شعبہ خواتین کی ضلعی صدر ساجدہ بیگم‘ ضلعی کوآرڈینیٹر طاہر ندیم بگھور‘ انصاف سٹوڈنٹس فیڈریشن کے ضلعی صدر ملک تنویر اعوان‘ شایان بلوچ‘ چیئرمین یونین کونسل ملک غلام حسن سلہال سمیت دیگر عہدیدار بھی موجود تھے۔ اُنھوں نے کہا کہ پارٹی ٹکٹ کے حصول کیلئے درخواستیں دینا تمام کارکنوں کا حق ہے میں انشاء اﷲ قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 94سے انتخاب لڑوں گا اور اس ضمن میں میں نے باقاعدہ 
درخواست دیدی ہے۔ اُنھوں نے کہا کہ عمران خان صرف سیاستدان ہی نہیں قومی لیڈر ہیں۔ سیاستدان اور لیڈر میں فرق یہ ہوتا ہے کہ سیاستدان انہوں نے مزید کہا کہ ۔میڈیا ملک کا اہم ستون ہے بنیادی مقصد موجودہ الیکشن میں پی ٹی آئی کو بھر پور کوریج دی جائے ۔پارٹی میں کوئی بڑا اختلاف نہیں چھوٹے موٹے اختلاف ہر جگہ ہوتے ہیں اختلاف رائے ہر سیاسی جماعت میں ہے جوکہ جمہوریت کا حسن ہے ۔میں ڈسٹرکٹ صدر ضرور ہوں لیکن اگر پارٹی نے ٹکٹ دیا تو این اے 94 سے ضرور الیکشن لڑوں گا ۔ابھی تک کسی کے ساتھ کوئی پینل نہیں بنا ۔پارٹی نے جو فیصلہ کیا اس کے ساتھ کھڑے ہونگے پوری دنیا کی حکومتوں میں اسٹیبلشمنٹ کا رول ہوتا ہے جہاں سیاسی حکومتیں ڈیلور نہیں کرسکتیں وہاں اسٹیبلشمنٹ اپنا رول پلے کرتی ہے۔جو ہمیشہ کرتی رہے گی سیاسی کمزوریوں کی وجہ سے بیرونی قوت اثر انداز ہوتی ہے احسان ٹوانہ کے مقابلہ میں اپنے آپکو بہتر امیدوار تصور کرتا ہوں ۔85 والی چیزیں اب نہیں چل سکتیں احسان ٹوانہ تین امیدواروں کو ساتھ ملا کر نہیں آرہے اس وقت بھی میں نے ذیادہ اور ان سے ڈبل ووٹ حاصل کیے اور اب تو پارٹی بہت مقبول ہے ذمہ داری سے کہ رہا ہوں کہ سٹنگ ایم پی اے ٹکٹ کیلئے رابطہ میں ہیںمحض الیکشن کے متعلق سوچتا ہے جبکہ لیڈر پوری قوم کے بارے سوچتا ہے۔ اس لئے اپنے لیڈر عمران خان کے فیصلہ کو ہی اہمیت دی جائے گی۔ اُنھوں نے کہا کہ ضلع خوشاب کی سیاست میں 35سالوں سے دو خاندانوں کی سیاست چلی آ رہی تھی گذشتہ عام انتخابات میں چلنے والی تبدیلی کی لہر کو دیکھتے ہوئے تین بڑے گروپوں نے اتحاد کیا اور اُنھوں نے مل کر 64ہزار ووٹ حاصل کئے جبکہ میں نے سیاسی میدان میں نووارد ہونے کے باوجود 37ہزار ووٹ لیے اس لئے اور یہ ووٹ تبدیلی کے نام پر حاصل کئے اس لئے میں پارٹی ٹکٹ کو اپنا استحقاق سمجھتا ہوں۔ ایک سوال کے جواب میں اُنھوں نے بتایا کہ عمران خان تمام فیصلے خود کرتے ہیں کسی سے ڈکٹیشن نہیں لیتے۔ اُنھیں ضیاء اور مشرف دور میں وزارت عظمیٰ کی پیشکشیں کی گئیں لیکن اُنھوں نے مسترد کر دیں۔ علاقائی گروپ بندیوں کے حوالے سے بات چیت کرتے ہوئے اُنھوں نے کہا کہ ٹوانہ گروپ کے سربراہ سابق صوبائی وزیر ملک خدا بخش ٹوانہ ہیں اور ملک احسان اﷲ ٹوانہ اُن کے فیصلوں کے پابند ہیں اس لئے یہ کہنا قبل از وقت ہوگا کہ وہ پی ٹی آئی کے ٹکٹ پر انتخاب لڑیں گے یا آزاد حیثیت سے میدان میں اُتریں گے۔ ایک اور سوال کے جواب میں اُنھوں نے دو ٹوک الفاظ میں کہا کہ اُن کی پنجاب اسمبلی کے رُکن ملک محمد وارث کلو سے کوئی ملاقات نہیں ہوئی۔ ہماری جماعت میں ہر فیصلہ دوستوں کو اعتماد میں لے کر کیا جاتا ہے۔ اُنھوں نے اعلان کیا کہ 26اپریل کو پی ٹی آئی کے ضلعی سیکرٹریٹ پاکستان ہاؤس کی افتتاحی تقریب منعقد ہو گی جس میں سینیٹر چوہدری محمد سرور بطور مہمانِ خصوصی شریک ہونگے۔ جبکہ 29اپریل کو لاہور میں منعقد ہونیوالے پی ٹی آئی کے تاریخی جلسہ میں شرکت کیلئے ضلع خوشاب سے ہزاروں کارکنوں کے قافلے روانہ کئے جائیں گے۔ ’’میٹ دی پریس‘‘ پروگرام کے اختتام پر ڈسٹرکٹ پریس کلب جوہرآباد کے صدر الطاف چغتائی نے انجینئر گل اصغر بگھور کو ڈسٹرکٹ پریس کلب کی تاحیات اعزازی رُکنیت دینے کا اعلان کیا اور اُنھیں شیلڈ دی گئی۔ انجینئر گل اصغر بگھور نے ڈسٹرکٹ پریس کلب جوہرآباد کو ایک لاکھ روپے عطیہ دینے کا اعلان کیا۔ 
;
احسان ٹوانہ نہیں، خدابخش ٹوانہ سے برابر کا جوڑ پڑیگا احسان ٹوانہ نہیں، خدابخش ٹوانہ سے برابر کا جوڑ پڑیگا Reviewed by Khushab News on 8:35:00 PM Rating: 5

کوئی تبصرے نہیں:

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.