وادی سون کی پراسرار عمارت

خوشاب نیوز ڈاٹ کام)وادی سون کے گاؤں چٹہ میں گورنمنٹ بوائز پرائمری سکول کا تعمیراتی کام مکمل نہ ہو سکا‘ ٹھیکیدار کام اُدھورا چھوڑ کر بھاگ گیا۔ جس کے باعث سکول کے تدریسی سٹاف اور طلباء کھلے آسمان کے نیچے تدریسی عمل جاری رکھنے پر مجبور ہیں۔ گورنمنٹ بوائز پرائمری سکول چٹہ میں دو کمروں اور ایک برآمدے کی تعمیر کا ٹھیکہ ملازم حسین نامی ٹھیکیدار نے لیا تھا جس نے چھ ماہ کے دوران عمارت کا صرف ڈھانچہ تعمیر کیا اور کام اُدھورا چھوڑ کر غائب ہو گیا۔ پلستر ‘ دروازوں اور کھڑکیوں سے محروم کلاس روموں کی دیواریں ارباب اختیار کا منہ چڑھا رہی ہیں۔مقامی لوگوں نے ا مطالبہ کیا ہے کہ محکمہ بلڈنگ کے ٹھیکیدار کے خلاف سخت ترین قانونی کاروائی عمل میں لائی جائے اور سکول کی عمارت کو مکمل کرنے کیلئے ٹھوس اقدامات اٹھائے جائیں۔ اس ضمن میں جب ایس ڈی او بلڈنگ ریاض کھوکھر سے رابطہ کیا گیا تو اُنھوں نے بتایا کہ ٹھیکیدار گذشتہ دو مہینوں سے غائب ہے محکمہ بلڈنگ کی جانب سے اس کے خلاف قانونی کاروائی کیلئے عملی تحرک کیا جا رہا ہے۔ 

;
وادی سون کی پراسرار عمارت وادی سون کی پراسرار عمارت Reviewed by Khushab News on 5:59:00 PM Rating: 5

کوئی تبصرے نہیں:

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.